شاہی محل نے شہزادی کیٹ کی تصاویر جاری کرنے سے انکار کیوں کیا؟

برطانوی شاہی محل نے مدرز ڈے کے موقع پر شہزادی کیٹ کی غیرایڈٹ شدہ تصاویر جاری کرنے سے انکار کردیا۔

پرنس آف ویلز کیٹ مڈلٹن نے مدرز ڈے پر جو تصاویر جاری کی تھیں اسے انھوں نے ایڈٹ کرنے کا اعتراف کیا تھا۔ پیٹ کی سرجری کے بعد کیٹ تقریباً دو ماہ سے منظر عام سے غائب تھیں، جس کی وجہ سے ان کی خیریت کے بارے میں عوام میں تشویش پائی جاتی تھی۔

مدرز ڈے پر شہزادی کیٹ کی اپنے بچوں کے ہمراہ ایک تصویر سامنے آئی تھی جس میں وہ اپنے بازوؤں کے حصار میں بچوں کو لیے مسکراتی ہوئی نظر آرہی تھیں۔

اس کے بعد کیٹ نے تسلیم کیا تھا کہ انھوں نے اس تصویرمیں ایڈیٹنگ کی ہے، کینسنگٹن پیلس کا کہنا تھا کہ ونڈسر میں پرنس ولیم نے خود یہ تصویر کھینچی تھی۔

اس حوالے سے کیٹ نے ایک سوشل میڈیا پوسٹ میں واضح کیا ہے کہ ’بہت سے شوقیہ فوٹوگرافروں کی طرح میں بھی کبھی کبھار ایڈیٹنگ کا تجربہ کرتی ہوں۔ ہم نے کل خاندانی تصویر شیئر کی تھی اور اس کے سبب جو بھی الجھن پیدا ہوئی میں اس کے لیے میں معذرت چاہتی ہوں۔

تاہم اب کینسنگٹن پیلس نے کہا ہے کہ وہ اصل غیر ایڈٹ شدہ تصویر کو دوبارہ جاری نہیں کرے گا۔

تاہم تعلقات عامہ اور بحرانی صورتحال کے مشیر مارک بورکوسکی کا کہنا ہے کہ کیٹ نے اس حوالے سے معافی مانگ لی ہے اور یہ محل کے مثبت تاثر کے لیے فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے۔

انھوں نے کہا کہ یہ قابل فہم ہے کہ وہ گھر میں کمپیوٹر اور اے آئی ٹول کے ساتھ کھیل رہی ہوں، لیکن اگر وہ واقعی کسی بھی طرح کا اعتماد دوبارہ حاصل کرنا چاہتے ہیں تو انہیں غیر ترمیم شدہ تصویر جاری کرنی چاہیے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *